جو بھی جھوٹا تھا وہی خواب دکھایا خود کو

333

جو بھی جھُوٹا تھا وہی خَواب دکھایا خُود کو
با رہا مَیں نے بنایا ہے تماشا خُود کو

جو نا معلُوم تھا پہلے اُسے معلُوم کیا
پھر بہت دیر تَلک غَم مِیں جلایا خُود کو

کوئی بے مول سَمجھتے ہوئے لِے جائے گا
اِسی دُھن مِیں پَسِ بَازار سجایا خُود کو

مُجھے معُلوم ہے، مُجھ مِیں بھی کئ خَامِیاں ہیں
کبھی سَمجھا بھی نہیں، مَیں نے خُدا سا خُود کو

SHARE
Previous articleDedication
Next articleRespect people