کانٹوں پہ کیسے چلنا ہے، یہ چل کر پتہ چلا

0
58

کَانٹوں پہ کِیسے چَلنا ہے، یِہ چَل کَر پَتہ چَلا
گھر کِیا ہے؟ ہَم کو گھر سے نِکَل کَر پَتہ چَلا

اس سَلطنت مِیں اَب بھی غَریبی کا رَاج ہے
یِہ رَاز شَاہ کو بھِیس بَدل کَر پَتہ چَلا

بَچنے کا رَاستہ بھی پھِسلنے کے سَاتھ ہے
اِس بات کا ہَمیں بھی پھِسَل کَر پَتہ چَلا

سَچ بولیے تو کوئی یَہاں پُوچَھتا نَہیں
یِہ آئینے مِیں خُود کو بَدل کَر پَتہ چَلا

کھونا ہی اس کو اَصل مِیں اس کا حَصُول ہے
یِہ فَلسَفہ ہَمیں بھی سَنبھل کَر پَتہ چَلا

SHARE
Previous articleDedication
Next articleRespect people